اردو کے ناقابلِ ترجمہ الفاظ

ہر زبان میں کچھ ایسے الفاظ ہوتے ہیں جن کا متبادل کسی اور زبان میں نہیں ملتا۔ اردو میں بھی کئی ایسے الفاظ ہیں جنھیں آسانی سے ترجمہ نہیں کیا جا سکتا۔

میرے خیال سے اس کی سب سے بڑی مثال لفظ ’بابل‘ ہے۔ دوسری زبانوں میں پدر، فادر، اب، وغیرہ تو مل جائے گا مگر اس عجیب و غریب لفظ سے کچھ ایسے کھٹے میٹھے جذبات وابستہ ہیں اور اسے سن کر آنکھوں کے سامنے جو تصاویر گھومنے لگتی ہیں یا کانوں میں جو گیت گونجتے ہیں، وہ کسی اور زبان کے کسی اور لفظ سے ممکن نہیں۔

کیا آپ اردو کے کچھ اور ایسے الفاظ کی مثالیں دے سکتے ہیں جن کا دوسری زبانوں میں ترجمہ نہیں کیا جا سکتا؟

تبصرے

  • چہ جائیکہ
  • باب کا سندھی ترجمہ "مارُو" maaroo
  • مارو تو غالباً صرف باپ کو کہتے ہیں، ”بابل” کو نہیں۔

  • لاج كا انكلش مين كيا ترجمه هوكا؟
  • طیب صاحب، لاج کے متبادل انگریزی الفاظ یہ ہو سکتے ہیں

    modesty, bashfulness, sense of honour, good name

  • گنے کی گنڈیری کو انگلش میں کیا کہیں گے

  • گنڈیری کے لیے کوئی واحد انگریزی لفظ نہیں ہے، جس کی وجہ یہ ہے کہ انگریزوں کے ہاں نہ تو گنا ہوتا ہے نہ ہی گنڈیری۔ البتہ بات سمجھانے کے لیے
    small piece of sugar cane
    کہہ سکتے ہیں۔

  • Sugar cane bit
  • جی شیروانی صاحب

  • سر ظفر صاحب،،
    سنا ہے اردو کے لفظ
    غیرت
    کا کوئی انگریزی متبادل نہیں۔
    کیا یہ درست ہے۔
    @Zafar sahib
  • میرے خیال میں شرم کا ترجمہ تو انگریزی میں ممکن ہے لیکن لاج کے ساتھ بھی بابل کی طرح کچھ اور ہی طرح کے جذبات منسلک ہیں۔

  • آپ نے درست فرمایا یاسمین صاحبہ، لاج یا پھر حیا ایسے الفاظ ہیں جن کو تمام انسلاکات کے ساتھ انگریزی میں منتقل کرنا خاصا مشکل ہے۔

سائن ان یا رجسٹر تبصرہ کرنے کے لئے۔